Ministry of Planning
Development & Special Initiatives
Public Awareness Campaign ON Corruption: "United Against Corruption for a Prosperous Pakistan....."

Press Release/Tickers

Planning Minister inaugurates Governance Lab, anno...

Published : 9 December 2022

In order to ensure good governance and transparency in the country, th...


اگلے عام انتخابات اکتوبر 2023...

Published : 6 December 2022

وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی ترقی و خص...


بلوچستان ریذیڈنشیل کالج، ل...

Published : 6 December 2022

وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی ترقی و خص...


وزیر منصوبہ بندی و ترقی پرو...

Published : 6 December 2022

پاکستان اور ڈنمارک کے مابین تعلقات مضب...


وفاقی وزیر منصوبہ بندی احسن اقبال کا بلوچستان حکومت کو گوادر سیف سٹی پروجیکٹ کو چھ ماہ میں مکمل کرنے کی ہدایات

Dated : 30 August 2022

گوادر سیف سٹی پراجیکٹ (جی ایس سی پی) کو چھ ماہ میں مکمل کرنے کے لیے وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی ترقی اور خصوصی اقدامات پروفیسر احسن اقبال نے منگل کو صوبائی حکومت بلوچستان کو ہدایت کی ہے وہ اس پر کام تیز کریں تاکہ آئندہ ماہ سینٹرل ورکنگ ڈویلپمنٹ پارٹی کے اجلاس میں پیش کیا جا سکے.

وفاقی وزیر نے یہ ہدایات جی ایس سی پی پر پیشرفت کا جائزہ لینے کے لیے اسٹیئرنگ کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے جاری کیں۔ اجلاس میں ایڈیشنل سیکرٹری منصوبہ بندی سیکرٹری وزارت انفارمیشن اینڈ ٹیکنالوجی اور انسپکٹر جنرلز پولیس, بلوچستان اور (اسلام آباد) نے شرکت کی۔

واضح رہے کہ پنجاب سیف سٹیز اتھارٹی (PSCA) نے گوادر سیف سٹی پراجیکٹ کو تکنیکی اور آپریشنل مدد فراہم کرنے کے لیے پہلے ہی ایک مفاہمت کی یادداشت پر دستخط کیے ہیں تاکہ پنجاب والے سیف سٹی ماڈل کو اپنا جا سکے جو کہ ایک بہترین ماڈل تصور کیا جاتاہے ۔یہ منصوبہ حکومت بلوچستان سرپرستی میں شروع کیا گیا تھا۔

اجلاس میں چیف سیکرٹری بلوچستان نے وفاقی وزیر کو منصوبے کی موجودہ صورتحال سے آگاہ کیا۔ جبکہ وفاقی
وزیر نے پیش رفت کا جائزہ لیتے ہوئے بلوچستان کی صوبائی حکومت کو ہدایت کی کہ وہ اگلے ہفتے پی ایس سی اے کے ساتھ ایک اجلاس بھی کرے جس نے پنجاب میں ایک کامیاب سیف سٹی پراجیکٹ کا اجراء کیا تھا۔

اس منصوبے کے تحت گوادر کے مختلف علاقوں میں 675 سی سی ٹی وی کیمرے نصب کیے جائیں گے تاکہ علاقے کو محفوظ بنایا جا سکے.

وفاقی وزیر نے چیف سیکرٹری بلوچستان کو اس منصوبے کے لیے پروفیشنل پروجیکٹ ڈائریکٹر کی بھرتی کرتے ہوئے منصوبے کی لاگت کو معقول بنانے کی بھی ہدایت کی.

اجلاس میں وفاقی وزیر نے کوئٹہ سیف سٹی پراجیکٹ کی صورتحال کے کا بھی جائزہ لیا جبکہ وفاقی وزیر کو بتایا گیا کہ اس منصوبے کے لیے جدید آلات خریدے جا چکے ہیں اور اس پر مزید پیش رفت جاری ہے.

وفاقی وزیر نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ وہ اسے کوئٹہ سیف سٹی منصوبے کو گوادر سیف سٹی پراجیکٹ کے ساتھ مربوط کریں.

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ منصوبے کا بنیادی مقصد گوادر کے لیے زیادہ سے زیادہ حفاظتی اقدامات کرنا ہے جو سی پیک کے لیے ایک گیٹ وے ہے